علی زیدی نے جنرل فیض حمید کو برا بھلا کہنے پر زرداری کو آڑے ہاتھوں لیا۔


پی ٹی آئی رہنما علی زیدی نے کہا ہے کہ پی پی پی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری قومی ٹیلی ویژن پر ایک تھری اسٹار جنرل پر تنقید کر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق علی زیدی نے بدھ کو آصف علی زرداری کی پریس کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ کور کمانڈر پشاور سے متعلق زرداری کے تبصرے ہمارے اداروں کو کمزور کرنے کی کوشش ہے۔

علی زیدی نے کہا کہ ڈی جی آئی ایس پی آر نے واضح کیا کہ ہماری مسلح افواج کو سیاسی معاملات میں نہ گھسیٹا جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایک خاص جنرل کو ‘سائیڈ لائن’ کرنے کے بارے میں زرداری کے ریمارکس حیران کن ہیں اور پی ٹی آئی اس کی مذمت کرتی ہے۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ یہ پہلا موقع نہیں ہے کہ انہوں نے یا ان کے اتحادیوں نے قومی اداروں پر حملہ کیا ہو۔ انہوں نے کہا کہ میموگیٹ پیپلز پارٹی کے دور میں ہوا جب کہ مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز اپنی حالیہ تقاریر میں ہماری مسلح افواج کو نشانہ بنا رہی ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ان لوگوں نے اپنی تقریروں میں جرنیلوں کا نام لے کر ہماری افواج کا امیج خراب کیا ہے لیکن پی ٹی آئی نے ایسا کوئی کام نہیں کیا۔

وزیر اعظم کے حالیہ دورہ لندن پر تنقید کرتے ہوئے علی زیدی نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے دور میں پوری کابینہ دبئی بھاگتی تھی اب لندن کی طرف بھاگی ہے۔

‘اگر زرداری پاکستان کو ‘سرے محل’ تحفے میں دیں تو پاکستان کے آدھے مالیاتی مسائل حل ہو جائیں گے۔’

علی زیدی نے مزید کہا کہ زرداری بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو ‘خصوصی نشستیں’ دینے کی بات کرتے ہیں، ‘کیا سمندر پار پاکستانی اقلیت ہیں؟’ اس نے سوال کیا.

یہ بھی پڑھیں:حق سندھ مارچ: علی زیدی نے چارٹر آف ڈیمانڈ پیش کیا۔

انہوں نے کہا کہ آصف علی زرداری اتنے نااہل ہیں کہ وہ اپنی اہلیہ بے نظیر بھٹو اور اپنے بہنوئی مرتضیٰ بھٹو کے قاتلوں کو بھی نہیں ڈھونڈ سکے۔

وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کو لے کر انہوں نے کہا کہ وہ افغانستان کو اپنی منی لانڈرنگ کے ثبوت فراہم کریں گے۔

علی زیدی نے پی ٹی آئی کے منحرف ارکان کے حوالے سے ای سی پی کے فیصلے پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ ای سی پی ہمارے خلاف متعصب ہے۔

تبصرے





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published.