وزیر اعظم نے دنیا پر زور دیا کہ وہ سیلاب متاثرین کو انتہائی ضروری امداد کی فراہمی میں پاکستان کا ساتھ دے۔



وزیراعظم محمد شہبازشریف نے کہا ہے کہ حکومت پیناڈول اور پیراسیٹامول بنانے والوں کو سبسڈی فراہم کرے گی تاکہ انہیں عوام کے لیے سستی بنایا جا سکے۔

وزیر اعظم پاکستان بھر میں سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں سیلاب سے متعلق امداد اور بحالی کی مختلف سرگرمیوں کی رفتار کا جائزہ لینے کے لیے متعلقہ حکام کے ایک آن لائن اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔

اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم نے بتایا کہ انہوں نے ورلڈ بینک کے صدر اور انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ کے منیجنگ ڈائریکٹر سے مفید ملاقاتیں کیں اور پاکستان میں سیلاب کی صورتحال پر جامع تبادلہ خیال کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ انہوں نے نقصانات پر اپنے دکھ کا اظہار کیا اور پاکستان کی ہر ممکن مدد اور حمایت کا یقین دلایا۔

وزیر اعظم نے کہا کہ انہوں نے خبردار کیا تھا کہ لاکھوں کمزور بچے ضروری غذائی اشیاء سے محروم ہیں اور وہ ڈائریا جیسی بیماریوں میں مبتلا ہو سکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سیلاب سے ہونے والی بڑے پیمانے پر تباہی کے باعث پاکستان میں عوام اپنے محدود وسائل سے اکیلے اس چیلنج کا مقابلہ نہیں کر سکتے، انہوں نے عالمی برادری، عالمی اداروں جیسے ورلڈ بینک اور آئی ایم ایف اور دیگر دوست ممالک پر زور دیا کہ وہ ان کی مدد کریں اور سیلاب زدگان کی امداد کریں۔ بہت ضروری ریلیف.

وزیراعظم نے متاثرہ علاقوں میں کھانے پینے کی اشیاء، خیموں اور ادویات کی تقسیم کا جائزہ لیا۔

انہوں نے متعلقہ حکام کو ہنگامی بنیادوں پر متاثرہ علاقوں میں ضروری اشیائے خوردونوش خصوصاً بچوں کی خوراک کی تقسیم کے لیے تمام دستیاب وسائل کو بروئے کار لانے کا حکم دیا۔

وزیر اعظم نے تباہ کن سیلاب سے تباہ ہونے والی سڑکوں، ریلوں، پلوں اور دیگر انفراسٹرکچر کی بحالی کا بھی جائزہ لیا اور متعلقہ وفاقی اور صوبائی محکموں کو جلد از جلد آپریشنل کرنے کے لیے اپنی کوششیں تیز کرنے کا حکم دیا۔

وزیراعظم نے احسن اقبال کو اسلام آباد ہائی کورٹ سے نیب کیس میں بری ہونے پر مبارکباد بھی دی۔

اسے اچھی خبر قرار دیتے ہوئے وزیر اعظم نے افسوس کا اظہار کیا کہ پچھلی حکومت اپنے مخالفین کے جادوگرنی میں ملوث تھی اور انہیں عجیب و غریب طریقے سے جھوٹے مقدمات میں پھنسانے کی کوشش کی گئی۔

.



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published.